24

تمام افسران نیک نیتی اور جذبے کے ساتھ کام کریں

اسلام آباد(شبیر مغل) ایس ایس پی آپریشنز ڈاکٹر سید مصطفی تنویر کی زیرصدارت سکیورٹی و کرائم کے حوالے سے اہم اجلاس۔
ناقص کارکردگی اور ڈیوٹی میں غفلت پر ایس ایچ او کھنہ کو معطل کر دیا،
بہترین کارکردگی پر چھ تفتیشی افسران کو نقد انعامات اور تعریفی سرٹیفکیٹس دئیے۔
تمام افسران نیک نیتی اور جذبے کے ساتھ کام کریں،ایس ایس پی آپریشنز کی افسران کو سخت ہدایات۔
تفصیلات کے مطابق ایس ایس پی آپریشنز اسلام آباد ڈاکٹر سید مصطفی تنویر کی زیر صدارت ریسکیو ون فائیو پر سکیورٹی و کرائم کے حوالے سے ایک اہم اجلاس منعقد ہوا جس میں ایڈیشنل ایس پی اسلام آباد فرحت عباس کاظمی، زونل ایس پیز، ایس ڈی پی اوز اور ایس ایچ اوز نے شر کی، ایس ایس پی آپریشنز نے ناقص کارکردگی اور ڈیوٹی میں غفلت پر ایس ایچ او کھنہ کو معطل کردیا،جبکہ بہترین پرفارمنس پر چھ تفتیشی ا فسران سب انسپکٹر ز منظور احمد، سب انسپکٹر عظمت حیات، اے ایس آئی رشید، اے ایس آئی پرویز، اے ایس آئی عارف اور اے ایس آئی خالد محمود کو نقد انعامات اور تعریفی سرٹیفکیٹس سے نوازا۔ ایس ایس پی آپریشنز نے تمام افسران کو ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا کہ تمام افسران کارکردگی دکھائیں، ناقص پرفارمنس اور شہریوں کی جان ومال کے تحفظ میں غفلت کسی صورت برداشت نہیں کی جائے گی، انہوں نے کہا کہ تمام افسران اپنے ماتحت عملے کو ڈیوٹی بھیجنے سے پہلے ایس او پیز پر مکمل درآمد کرنے کے بارے میں بریف کریں، ڈیوٹی پر موجود ہر افسر و جوان بلٹ پروف جیکٹ و ہیلمٹ پہنے گا، انہوں نے کہا کہ کسی بھی وقت سرپرائز چیکنگ کی جائے گی، جس جوان نے جیکٹ نہ پہنی ہوگی اس کے متعلقہ ایس ایچ او کے خلاف کارروائی ہو گی، اپنے ماتحت عملے کو اپنی اولاد کی طرح سمجھیں اور ان کی سکیورٹی کا خاص خیال رکھیں، دوران چیکنگ و سرچ آپریشنز ایس اوپیز پر سختی سے عمل درآمد کریں، ایس پی رورل، انڈسٹریل ایریا اور صدر زون راولپنڈی پولیس کے افسران کے ساتھ میٹنگز کریں اور تمام جڑواں علاقوں میں سرچ آپریشنز کریں، قبضہ مافیا کے خلاف ایکشن جاری رکھیں اور قبضہ کے سلسلہ میں موصول ہونے والی درخواستوں کو اینٹی لینڈ گریبنگ کمیٹی میں بھجوائیں، سول نوعیت کے معاملات کے متعلق درخواستیں مصالحتی کمیٹیوں کو مارک کریں،اپنے ماتحت عملے پر چیک اینڈ بیلنس رکھیں، ہم سب نے مل کر ایک ٹیم کے طور پر کام کرنا ہے اور شہریوں کی جان و مال کے تحفظ اور شہر کو محفوظ ترین بنانے کے لئے ہر افسر نیک نیتی، دل لگی اور جذبے کے ساتھ کام کرے تو اللہ تعالی کی مدد بھی حاصل ہو گی، میٹنگ کے آخر میں شہداء کے لئے فاتحہ خوانی کی گئی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں