21

آستانہ عالیہ عیدگاہ شریف جیسا اعلیٰ مقام راولپنڈی میں ہے جو کہ اتحاد و وحدتِ امت کا وہ مرکز ہے

راولپنڈی (سٹاف رپورٹر) دربارِ عالیہ عید گاہ شریف میں بروز منگل عالمی یا رسول اللہ ﷺ کانفرنس منعقد ہوئی جس کی صدارت سجادہ نشین و عالم اسلام کے ممتاز مذہبی و روحانی پیشوا پیر محمد نقیب الرحمن نے کی جبکہ مہمان خصوصی وفاقی وزیرِ داخلہ شیخ رشید احمد تھے۔ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیرِ داخلہ شیخ رشید احمد نے کہا یہ ہمارے لیے انتہائی خوش قسمتی اور سعادت کی بات ہے کہ آستانہ عالیہ عیدگاہ شریف جیسا اعلیٰ مقام راولپنڈی میں ہے جو کہ اتحاد و وحدتِ امت کا وہ مرکز ہے جس کا مقصد دلوں کو عشقِ رسولِ مقبول سے منور کرنا اور دینِ متین اسلام کی تبلیغ و اشاعت کا کارِ خیر سر انجام دینا ہے۔ وطنِ عزیز پاکستان کو جب جب کوئی کڑا وقت آیا تو آستانہ عالیہ عید گاہ شریف سے ہمیں بہترین تربیت و رہنمائی میسر آئی۔ آج کے اس پُر فتن دور میں حضرت پیر محمد نقیب الرحمان جیسے سچے پیروں کی بدولت ہی مخلوقِ خدا کو عشقِ رسول ِ کریم ﷺ، دینِ متین کی تعلیمات اور مخلوقِ خدا کی فلاح و بہبود کے لیے بہترین راہنمائی میسر ہے۔ہم بہت جلد پورے ملک میں حضرت پیر محمد نقیب الرحمن صاحب کی قیادت میں نکلیں گے اور عشقِ رسولِ مقبول ﷺ کے پیغام کو وطنِ عزیز کے کونے کونے، قریہ قریہ، گلی گلی اور محلے محلے تک پہنچائیں گے۔ الغرض عید گاہ شریف کی امتِ مسلمہ اور وطنِ عزیز پاکستان کے لئے خدمات آبِ زر سے لکھنے کے قابل ہیں۔ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سجادہ نشین پیر محمد حسان حسیب الرحمن نے کہا کہ حضور نبی کریم ﷺ کائنات کے ذرے ذرے کے لئے اللہ تعالیٰ کی رحمت اور وہ احسانِ عظیم ہیں جس کو ربِ رحمان نے قرآنِ کریم میں احسان جتلایا ہے۔آمدِ مصطفی ﷺ کے ذریعے ہی مخلوق کو خالقِ حقیقی کی معرفت عطا ہوئی، ظلم و جبر میں گھری انسانیت کو اسکا اصل مقام نصیب ہوا، کفر و شرک کے اندھیرے چھٹ گئے اور بچیوں کو زندہ در گور کرنے کا قبیح فعل اختتام پذیر ہوا۔ ہمارے آقا ﷺ عالمین کے رحمت بن کر تشریف لائے ہیں اور قرآنِ مجید گواہ ہے کہ آج اس قدر معاملات خراب ہو جانے کے باوجود اگرہم اللہ تعالیٰ کے عذاب سے بچے ہوئے ہیں تو اس کی واحد وجہ محسنِ اعظمِ انسانیت ﷺ کا شانوں کے ساتھ ہمارے درمیان رونق افروز ہونا ہے۔ امتِ مسلمہ اگر آج دین و دنیا میں کامیاب ہو سکتی ہے تو صرف اور صرف غلامیِ مصطفی ﷺ کے ذریعے سے ہی ایسا ممکن ہے۔ اس موقع پر مخطاب کرتے ہوئے غوثِ عالم حضرت شاہ رکنِ عالم ؒ کے سجادہ نشین اور و فاقی وزیر خارجہ پاکستان شاہ محمود قریشی نے کہا کہ حضور نبی کریم ﷺ کی بے پناہ بلندو بالا شانوں، اوصافِ حمیدہ اور خلقِ عظیم کے تذکروں سے قرآنِ کریم بھرا پڑا ہے۔ قیام و استحکامِ پاکستان کے لئے علماء و مشائخ کا کردار ہماری تاریخ کا روشن باب ہے۔ خانقاہی نظام نے نہ صرف مخلوقِ خدا کا تزکیہ بلکہ اُن کے اخلاق و کردار کی ایسی عمدہ تربیت کی کہ لوگوں کے وجود مخلوقِ خدا کے لیے نفع کا باعث بن گئے۔ عید گاہ شریف کا ایک ہی عظیم مشن ہے کہ مخلوقِ خدا کے دلوں کو محبتِ رسولِ کریم ﷺ سے بھرا اور رنگا جائے اور امتِ مسلمہ کا رخ ہر طرف سے موڑ کر اسکے روحانی مرکز مدینہ منورہ کی جانب کیا جائے کیونکہ مسلمانانِ عالم کے پاس حقیقی و یقینی کامیابی کے لئے اتباعِ رسولِ مقبول ﷺ کے علاوہ کوئی راستہ نہیں ہے۔ اس عظیم روحانی اجتماع میں وفاقی وزراء جن میں وزیر مملکت اطلاعات و نشریات فرخ حبیب، سفراء کرام، ایم این ایز، مشائخِ عظام جن میں پیر سید حبیب اللہ شاہ (گھمکول شریف)، پیر سید سعادت علی شاہ(چورہ شریف)،سابق وفاقی وزیر مذہبی امور صاحبزادہ حامد سعید کاظمی، علمائے کرام جن میں علامہ حافظ فاروق چشتی، علامہ حافظ محمد اقبال رضوی، علامہ محمد سعید اختر و دیگر، نعت خوانانِ عظام جن میں تصدق رسول، محمد عاقب، محمد حسان شاہد، حافظ محمد عامر شہزاد و دیگر اور لاکھوں کی تعداد میں اندرون و بیرونِ ممالک سے مریدین و وابستگانِ عید گاہ شریف، عوام الناس اور خواتین کی بڑی تعداد نے بھی شرکت کی۔ عید گاہ شریف کا مرکزی پنڈال کھچا کھچ بھر گیا، داخلی، خارجی راستوں، ملحقہ گلیوں محلوں اور سڑکوں پر تل دھرنے کو جگہ نہ تھی۔کانفرنس کے دوران کورونا وبا سے بچاؤ کیلئے تمام تر حکومتیs SOPپر سختی سے عمل کیا گیا۔ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سجادہ نشین پیر محمد نقیب الرحمن نے کہا کہ ایک فرمانِ الہیٰ اورفرمانِ رسولِ کریم ﷺ پر سچے دل سے عمل پیرا ہو کر ہم اپنی زندگیوں میں انقلاب بر پا کر سکتے ہیں۔ حضور نبی رحمت ﷺ کے اعلیٰ پاک فرمودات انسانیت کی فلاح و بقا کے لئے ہیں اور اتباعِ رسولِ کریم ﷺ ہی وہ واحد راستہ ہے جس کے ذریعے ربِ رحمن کو راضی کیا جا سکتا ہے کیونکہ ربِ رحمان قرآنِ کریم میں خود حکم ارشاد فرما رہا ہے کہ جوق کچھ میرے حبیب ﷺ تم کو عطا فرمائیں وہ لے لو اور جس سے منع فرمائیں اس سے رک جاؤ۔ عالمی یا رسول اللہ ﷺ کانفرنس کی مرکزی نشست کا اختتام پیر محمد نقیب الرحمن کی وطن ِ عزیز کی سلامتی، خوشحالی، ترقی، افواجِ پاکستان کی سر بلندی، اتحاد بین المسلمین اور پوری دنیا سے مہلک کرونا وباء کے خاتمے کیلئے خصوصی دعا پر ہوا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں