20

حریم شاہ معاملے پر ایف آئی اے کا برطانوی حکام کو خط

وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے) نے ٹک ٹاکر حریم شاہ کے خلاف برطانیہ کی نیشنل کرائم ایجنسی (این سی اے) سے رابطہ کرلیا۔

ایف آئی اے کی جانب سے برطانیہ کی نیشنل کرائم ایجنسی کو لکھے گے خط کی تفصیلات جیو نیوز کو موصول ہوگئیں۔

اس خط میں کہا گیا کہ حریم شاہ نے دھوکا دہی کے ذریعے رقم اسمگل کرنے کا دعویٰ کیا، ان کی یہ ویڈیو مبینہ طور پر برطانیہ میں بنائی گئی۔

اس میں کہا گیا کہ حریم شاہ کی جانب سے دھوکا دہی کے ذریعے رقم اسمگل کرنے کا دعویٰ کیا گیا، ٹک ٹاکر حریم شاہ کراچی سے دوحہ اور وہاں سے لندن ہیتھرو ایئرپورٹ پہنچی۔

خط میں کہا گیا کہ دوسری ویڈیو میں حریم شاہ نے سارے معاملے کو مذاق قرار دیا، حریم شاہ کی تردیدی ویڈیو لندن میں اسکائی مارکیٹنگ کے دفتر میں ریکارڈ کی گئی جس میں دانیال ملک نامی شخص نے رقم کو قانونی قراردیا۔

ایف آئی اے نے نیشنل کرائم ایجنسی سے دونوں ویڈیو کے تناظر میں حریم شاہ اور دانیال ملک کے خلاف انکوائری کی سفارش کی۔

اس میں یہ بھی کہا گیا کہ منی لانڈرنگ پاکستان میں قابلِ سزا جرم ہے، تحقیقات میں سامنے آنے والی تفصیلات سے ایف آئی اے کو بھی آگاہ کیا جائے۔

اس خط میں حریم شاہ کی سفری اور شناختی تفصیلات بھی فراہم کی گئی ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں